امریکہ میں وائرس کا دوسرا مرحلہ اس سے بھی مشکل ہو سکتا ہے: امریکی ماہرین

امریکہ میں وائرس کا دوسرا مرحلہ اس سے بھی مشکل ہو سکتا ہے: امریکی ماہرین

امریکہ کے ایک اعلی وبائی امراض کے ماہر کا کہنا ہے کہ ملک میں وائرس کے دوسرے مرحلے میں متاثرہ افراد کی تعداد حالیہ تعداد سے بڑھ سکتی ہے اور یہ موجودہ صورتحال سے بھی زیادہ برا ہو سکتا ہے۔امریکہ کے ادارہ برائے انسداد برائے وبائی امراض کے ڈائریکٹر رابرٹ ریڈفیلڈ نے خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ چند ماہ بعد آنے والے موسم سرما میں ملک میں کورونا وائرس کا دوسرا مرحلہ زیادہ خطرناک ہو سکتا ہے کیونکہ سرد موسم میں نزلہ زکام کے باعث متاثرین کی تعداد بڑھنے کا خدشہ ہے۔

ان کی جانب سے یہ تنبیہ ایک ایسے وقت میں آئی ہے جب امریکہ لاک ڈاؤن میں نرمی لا کر اپنی معیشت کا پہیہ ایک مرتبہ پھر چلانے کی تیاری کر رہا ہےڈاکٹر ریڈ فیلڈ نے واشنگٹن پوسٹ کو بتایا کہ ’ممکن ہے کہ اس وائرس کا ہماری قوم پر حملے اس سے بھی زیادہ مہلک ہو جس سے ہم ابھی گزر رہے ہیںانھوں نے مزید کہا کہ ’ہمیں نزلہ زکام اور کورونا وائرس کی وبا کا ایک ساتھ سامنا ہو گا۔‘

COMMENTS